قومی خبریں

title_image


Share on Facebook

لکھنؤ:یوپی کے مدارس میں ڈریس کوڈ نافذ کرنے پر ایس پی کے سینئر لیڈر اعظم خان نے یوگی حکومت پر جم کر نشانہ لگایا ہے۔اعظم خان نے کہا کہ حکومت نے ابھی آدھی بات کہی ہے۔انہوں نے کہا کہ اگر ڈریس کوڈ نافذ نہ ہوا اور مدارس نے نافذ نہیں کیا تو سزا کیا ہوگی؟ان کا کہنا تھا کہ کیا اس حالت میں مدرسہ بلدوز کر دیا جائے گا یا اساتذہ پر تیزاب ڈالا جائے گا۔اعظم خان نے کہا کہ ڈریس کوڈ کو نہ ماننے والوں کو سزا کیا ملے گی یہ بھی ساتھ۔ساتھ بتا دیا ہوتا توزیادہ اچھی بات ہوتی۔

اعظم خان یہیں نہیں رکے ،رامپور میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے مدارس میں یوگی حکومت کے ذریعے این سی ای آر ٹی نصاب نافذ کرنے پرکہا کہ'صاحب' جو چاہے کریں۔اگر وہ ایسا نہ کریں تو کیا ہوگا یہ بھی بتائیں ۔انہوں نے کہا کہ حکومت کو پر جرم کی سزا کا بھی اعلان کر دیناچاہئے تاکہ ایک بار پھر بحث میں یہ بات آ جائے کہ اندرا گاندھی کی ایمرجنسی کیا تھی اور نریندر مودی کی ایمرجنسی کیا ہے۔اعطم خان نے کہا کہ اندرا گاندھی کی ایمرجنسی اعلانیہ تھی۔نریندر مودی کی غیراعلانیہ ہے۔اعلانیہ سے غیراعلانیہ ایمرجنسی زیادہ خطرناک ہے۔

سی ایم یوگی کے ذریعےعلی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں دلتوں کو ریزرویشن دئے جانے کا مسئلہ اٹھانے پر اسعظم خان نے کہا کہ یہ یونیورسٹی کا معاملہ ہے، اس میں پرھے ۔لکھے لوگ ہی مشورہ دیں تو زیادہ اچھا ہے۔خاص کر اعظم خان نےکہا کہ جس نے آئین پڑھا ہو تھوڑا قانون جانتا ہو۔اعظم خان نے کہا کہ جو چار لفظ جانتا ہو،چوتھا یا چھتا پاس ہو وہ اگر اس معاملے میں بولے تو زیادہ اچھا ہے۔